دنیا

بھارت صحافیوں کیلئے خطرناک ترین ممالک میں شامل

غیر قانونی طور پربھارت کے زیر قبضہ جموں و کشمیر میں حریت رہنماؤں نے چھاپوں ، محاصروں اورتلاشی کی کاروائیوں کے دوران نہتے کشمیریوں کے قتل ،خواتین کے انسانی ڈھال کے طورپر استعمال اور گھروں کو تباہ کئے جانے پر مودی کی فسطائی بھارتی حکومت کی شدید مذمت کی ہے۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق بلال احمد صدیقی ،خواجہ فردوس اور جاوید احمد میر سمیت حریت رہنمائوں نے سرینگر میں جاری اپنے الگ الگ بیانات میں بھارتی فوج کے اس بیان پر کڑی تنقید کی کہ کشمیری عوام کے غم و غصے کو دورکرنے کیلئے فوجی قافلوں کے جھنڈوںکا رنگ تبدیل کیاجارہا ہے ۔ بلال صدیقی نے کہا کہ کشمیری اسی بھارتی فوج کے ہاتھوںجعلی مقابلوں اور دوران حراست ہزاروں بیٹوں کے قتل،ظلم وتشدد ،جبری گمشدگیوں اور ماؤں، بہنوں اور بیٹیوں کی بے حرمتی کو نہیں بھولے ہیں ۔خواجہ فردوس نے کہا کہ تاریخ شاہدہے کہ کشمیریوں نے بھارت کے فوجی تسلط اور غیر قانونی قبضے کو کبھی تسلیم نہیں کیا۔جاوید احمد میر نے عالمی ریڈ کراس کمیٹی اور انسانی حقوق کی دیگر تنظیموں سے اپیل کی کہ وہ بھارتی جیلوںمیں نظربند تمام کشمیریوں کی رہائی کیلئے اپنا کردار ادا کریں۔ پیرس میں قائم صحافیوں کی تنظیم رپورٹرز ود آئوٹ بارڈرز نے ورلڈ پریس فریڈم انڈیکس2021 کی اپنی رپورٹ میںبھارت کو صحافیوں کیلئے خطرناک ترین ممالک کی فہرست میں شامل کیاہے۔ رپورٹ میں بھارت کو180 ممالک کی درجہ بندی میں 142 ویں نمبر پر رکھا گیا ہے۔رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ مقبوضہ جموںوکشمیر کے صحافیوں کو سخت پابندیوں اورنگرانی کا سامنا ہے۔ رپورٹ میں صحافیوں پر پولیس کے تشدد، سیاسی کارکنوں کی طرف سے حملوں اور جرائم پیشہ گروہوں یا بدعنوان افسران کی طرف سے ردعمل کا حوالہ دیتے ہوئے کہا گیا ہے کہ 2019 میں عام انتخابات کے بعد سے جب سے نریندر مودی کی بھارتیہ جنتا پارٹی دوبارہ اقتدار میں آئی ہے میڈیا پر ہندو قوم پرست حکومت کے موقف کی حمایت کرنے کیلئے دبائو بڑھ گیا ہے۔ دریں اثناء سرینگر اور وادی کشمیر کے دیگر علاقوں میں وزیر اعظم پاکستان عمران خان اور فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ کی تصاویر والے پوسٹرز چسپاں کئے گئے ہیں۔حق خودارادیت فورم کی طرف سے چسپاں کئے گئے پوسٹروں میں کہاگیا ہے کہ کشمیرکاز کیلئے سیاسی، سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھنے پر کشمیری عوام پاکستان کے شکر گزار ہیں۔ سرینگر کے مختلف علاقوں میں جموںوکشمیر ڈیموکریٹک جسٹس پارٹی کی طرف سے بھی پوسٹر چسپاں کئے گئے۔جموں میں فورم فار پیس اینڈ ٹیریٹوریل انٹیگریٹی کے زیر اہتمام ایک سیمینار کے مقررین نے پاکستان اور بھارت کی قیادت میں زوردیا کہ وہ تمام حل طلب مسائل کے پرامن کے لئے بات چیت کا آغاز کریں۔تقریب سے دیگر لوگوں کے علاوہ فورم کے صدرآئی ڈی کھجوریا نے بھی خطاب کیا۔نیشنل کانفرنس کے صدر فاروق عبداللہ اور نائب صدر عمر عبداللہ نے پاکستان کے قومی شاعرعلامہ محمد اقبال کو ان کی برسی پر خراج عقیدت پیش کیا۔ فاروق عبداللہ نے کہا کہ اقبال نے کشمیریوں کی سیاسی، سماجی اور اقتصادی آزادی کے لئے کوشش کی۔
٭٭٭٭٭

About the author

Peerzada M Mohin

Peerzada M Mohin

M Shahbaz Aziz is ...

Leave a Comment

%d bloggers like this: