انٹرٹینمنٹ

مودی اور بھارتی میڈیا یدھ ید ھ کر رہے تھے لیکن ختم شدپاک فوج نے کیا۔فیاض الحسن چوہان

صوبائی وزیر برائے اطلاعات و ثقافت فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہاللہ کے کرم سے پاکستان اور پاک افواج نے مودی کے ناپاک عزائم کو خاک میں ملادیا۔مودی اور بھارتی میڈیا یدھ ید ھ کر رہے تھے لیکن ختم شدپاک فوج نے کیا۔پاک فوج دوست کو دھوکہ اور دشمن کو موقع نہیں دیتی۔مودی میں اگر شرم باقی ہے تو سیاست چھوڑ کر گجرات میں چائے کا کھوکھا لگا لے۔عمران خان نے ابھی نندن کو چھوڑ کر صلاح الدین ایوبی کا حقیقی جانشین ہونے کا ثبوت دیا۔ 130کروڑ ہندوستانیوں کو پیغام دے کر مودی کے منہ پر طمانچہ مارا۔مودی کو واضع کیا تھا کہ جنگ مسلط نہ کرو۔حسن صدیقی کو سلام پیش کرتے ہیں جس جرات کا انہوں نے مظاہرہ کیا۔
ان خیالات کا اظہار فیاض الحسن چوہان نے آج یہاں لاہور کلیفٹ لپ اینڈ پیلٹ ویلفئیر سوسائٹی کے زیر اہتمام فری میڈیکل کیمپ کا افتتاح کرتے ہوئے کیا۔ دیگر مہمانان گرامی میں وائس چانسلر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز ڈاکٹر جاوید اکرم,ڈاکٹر راشد لطیف چیئرمین راشد لطیف میڈیکل کالج, جاوید نثار سید چیئرمین میڈی بنک ٹرسٹ, میاں عبدالوحید, ارم حسن,.پروفیسر ڈاکٹر افضل شیخ, پروفیسر فر خ محمود, پروفیسر طاہر مسعود اور ڈاکٹر احمد جمال صمدانی شریک تھے۔ اس میڈیکل کیمپ میں 40 کے قریب ان بچوں کی سرجری کی گئی جو کہ کٹے ہوئے ہونٹ اور تالو لے کر پیدا ہوتے ہیں۔ اس موقع پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ میں لاہور کلیفٹ لپ اینڈ پیلٹ ویلفئیر سوسائٹی کوخراج تحسین پیش کرتا ہوں۔ پروفیسر راشد لطیف اور انکی ٹیم کو مبارکباد پیش کرتا ہوں۔جس سوسائٹی میں ایسے اقدامات ہوں وہ کبھی بھی زوال پذیر نہیں ہوتی۔ ہمارے تمام شعبوں کے لوگ اور لیڈر شپ اپنا اپنا کردار ادا کرے گے تو کوئی پاکستان کو نقصان نہیں پہنچا سکتا۔ہمارے درمیان اتحاد اور اتفاق ہونا بہت ضروری ہے۔پاک بھارت حالیہ کشیدگی پر بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اس تمام ماحول میں پاکستان نے ذمہ دارانہ کردار ادا کیا جبکہ بھارت کی جانب سے غیر ذمہ داری کا مظاہرہ کیا۔ہم نے بھارتی قیدی واپس کیا اور بھارت نے ہمارا جیل میں قیدی شہید کیا۔فلموں میں اجے دیوگن سنجے دت سنی دیول اور دیگر فنکاروں کی بہادری دکھائی جاتی ہے۔بھارت کی بہادری صرف فلموں تک محدود ہے۔ لیکن حقیقت میں ابھی نندن جیسا حال ہوتا ہے۔بھارت باز نہ آیا تو انکی ہڈیوں کا سرمہ بنا دیں گے۔ابھی نندن کی واپسی پر انٹرنیشنل لیول پر پاکستان کو سراہا گیا۔انڈین میڈیا غلط پراپیگنڈہ کررہا ہے اور بھارت کا رویہ غیر مناسب ہے۔او آئی سی میں بھارت صرف اپنے مفادات کے لیے جانا چاہتا۔مودی کو امریکہ کاویزا انکی کرتوتوں کی وجہ سے نہ دیاگیا۔وزیراعظم عمران خان کو ابھی نندن کی واپسی اور اس تمام صورتحال پر نوبل انعام ملنا چاہیے جس کے لیے عالمی سطح پر رابطے بھی کریں گے۔ بھارتی پائلٹ کو رہا کر کے وزیراعظم عمران خان نے خطے میں امن کو ایک اورموقع دیاہے۔وزیراعظم عمران خان کا خیر سگالی کایہ اقدام تاریخ میں سنہری حروف سے لکھا جائے گا۔عالمی برداری پائلٹ کی رہائی کاخیرمقدم کررہی ہے۔وزیراعظم عمران خان نے امن کی طرف ایک اور قدم بڑھا کر حقیقی لیڈرہونے کا ثبوت دیاہے۔بھارت کو ہوش کے ناخن لینے چاہئیں۔امید ہے کہ جنگ کے بادل چھٹ جائیں گے۔
بعد ازاں اپنے ایک بیان میں انہوں نے لائن آف کنٹرول پر شہری آبادی پر بھارتی فوج کی بلااشتعال فائرنگ کی شدید مذ مت کی۔ انہوں نے کہا کہ میں شہید ہونے والے دوفوجی جوانوں کی بہادری اور جرآت کو سیلیوٹ پیش کرتا ہوں اور شہید فوجی جوانوں کے لواحقین سے دلی ہمدردی و اظہار تعزیت کرتا ہوں۔شہید کی موت درحقیقت قوم کی حیات ہے اور ان کا خون قوم کی زکٰوتہ ہے۔ دفاع وطن کیلئے اپنی قیمتی جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والے فوجی جوان ہمارے ہیرو ہیں۔پاکستان کی مسلح افواج دفاع وطن کیلئے ہمہ وقت تیار ہے۔پاکستانی قوم اپنی بہادر مسلح افواج کے ساتھ کندھے سے کندھا ملا کر کھڑی ہے۔ بھارت جنگی جنون میں بین الاقوامی قوانین اور انسانی حقوق کی دھجیاں اڑا رہا ہے۔بھارتی فوج کا شہری آبادی کو نشانہ بنانا بزدلانہ حرکت ہے۔بھارتی کا جارحیت پسند رویہ خطے کے امن کیلئے خطرہ ہے۔

About the author

Peerzada M Mohin

M Shahbaz Aziz is ...

Leave a Comment

%d bloggers like this: