جرم

ڈولفن فورس کو فائرنگ کا اختیار

ڈولفن فورس کو فائرنگ کا اختیار

لاہور ہائیکورٹ نے ڈولفن فورس کو فائرنگ کا اختیار دینے کے معاملے کی جلد سماعت کرنے کی متفرق درخواست منظور کر لی اور درخواست کو سماعت کیلیے تین جون کو پیش کرنے کی ہدایت کر دی
لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس شاہد مبین آصف محمود کی درخواست پر سماعت کی جس میں استدعا کی کہ ڈولفن فورس کو فائرنگ کا اختیار دینا ایک اہم معاملہ ہے. اس لیے اس کیخلاف درخواست پر جلد سماعت کرنے حکم دیا جائے. درخواست میں بتایا گیا کہ ڈولفن فورس کے اہلکار غیرتربیت یافتہ ہیں اور ڈولفن فورس کی فائرنگ سے شہریوں کی ہلاکت کے واقعات ہوئے ہیں. درخواست گزار کے مطابق ڈولفن فورس فائرنگ کا اختیار دینا شہریوں کی جان کو خطرے ڈالنے کے برابر ہے. درخواست میں استدعا کی گئی کہ ڈولفن فورس سے فائرنگ کرنے کا اختیار واپس لیا جائے.

About the author

Peerzada M Mohin

M Shahbaz Aziz is ...

Leave a Comment

%d bloggers like this: